پنجاب کا 26 کھرب 53 ارب کا بجٹ کثرت رائے سے منظور

لاہور: پنجاب اسمبلی نے آئندہ مالی سال کا 26 کھرب 53 ارب کا بجٹ کثرت رائے سے منظور کر لیا۔

پنجاب اسمبلی میں وزیر خزانہ ہاشم جواں بخت نے  فنانس بل پیش کیا جو کثرت رائے سے منظور کر لیا گیا۔

بجٹ پیش کیے جانے کے دوران ایوان میں چھاپوں اور لیگی کارکنوں کی گرفتاریوں کی گونج بھی سنائی دیتی رہی۔

اس دوران  مسلم  لیگ (ن) کے رکن توفیق بٹ کا کہنا تھا کہ گوجرانوالہ میں پولیس لیگی کارکنوں کے گھروں پر چھاپے مار رہی ہے اور گرفتاریاں بھی کی گئی ہیں۔

توفیق بٹ کے بیان پر اسپیکر  نے وزیر قانون کو اس  معاملے کو دیکھنے کی ہدایت کی۔

بجٹ کی منظوری کے وقت وزیر اعلیٰ  بھی ایوان میں موجود رہے  اور ایجنڈا مکمل ہونے پر اجلاس 28 جون دوپہر دو بجے تک ملتوی کردیا گیا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں