کاشتکاروں کے لیے پیپلز ہاری کارڈ متعارف کروانے کا فیصلہ

کراچی: صوبہ سندھ کے کاشتکاروں کے لیے پیپلز ہاری کارڈ متعارف کروانے کا فیصلہ کرلیا گیا، صوبائی وزیر زراعت اسماعیل راہو کا کہنا ہے کہ کارڈ پر 3 ارب روپے سبسڈی دی جائے گی۔

تفصیلات کے مطابق سندھ حکومت نے صوبے میں پیپلز ہاری کارڈ لانے کا فیصلہ کرلیا۔

صوبائی وزیر زراعت اسماعیل راہو کا کہنا ہے کہ سندھ حکومت اس سال پیپلز ہاری کارڈ پر 3 ارب روپے سبسڈی دے گی، 10 لاکھ کاشت کاروں کی رجسٹریشن کرنے جا رہے ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ 1 ارب روپے فرٹیلائزر، 1 ارب روپے فیڈ اور 1 ارب روپے ڈی اے پی پر سبسڈی دیں گے، چھوٹے کاشتکاروں کو بھی رجسٹرڈ کیا جائے گا۔

اس سے قبل اسماعیل راہو کا کہنا تھا کہ وفاقی حکومت کی جانب سے کاٹن آئل سیڈ اور کپاس پر 17 فیصد سیلز ٹیکسز واپس لیا جائے۔

انہوں نے کہا تھا کہ غلط پالیسیوں نے پہلے ہی زراعت کو بہت نقصان پہنچایا ، جننگ فیکٹریز پر پہلے کبھی بھی سیلز ٹیکس نہیں رہا۔ 5 سال پہلے 13 سو جننگ فیکٹریز تھیں اور اب 440 رہ گئی ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں