چیئرمین سی ڈی اے عامر علی احمد کو توہین عدالت کا نوٹس

اسلام آباد ہائی کورٹ نے وفاقی ترقیاتی ادارے ( سی ڈی اے) کے چیئرمین عامر علی احمد کو توہین عدالت کا شوکاز نوٹس جاری کردیا۔

اسلام آباد ہائی کورٹ کے جسٹس عامر فاروق نے چئیرمین کیپیٹل ڈویلپمنٹ اتھارٹی (سی ڈی اے) کو ذاتی حیثیت میں طلب کرتے ہوئے کہا کہ پیش ہو کر مطمئن کریں کیوں نہ آپ کے خلاف توہین عدالت کی کارروائی کی جائے۔ عدالت نے 12 نومبر کو کیس سماعت کے لیے مقرر کرنے کی ہدایت کردی۔عدالتی نوٹس میں کہا گیا کہ سی ڈی اے نے پلاٹوں کی الاٹمنٹ کی بیلٹنگ کے لیے نیلامی کا عمل شروع کیا ہے اور جاری کردہ اشتہار میں بتایا گیا ہے کہ اسلام آباد ہائیکورٹ کے حکم کے مطابق یہ عمل شروع کیا گیا، حالانکہ عدالت نے سی ڈی اے کو ایسا کوئی حکم جاری نہیں کیا۔ہائی کورٹ کے مطابق چیئرمین سی ڈی اے نے عدالت سے کہا تھا کہ پلاٹوں کی الاٹمنٹ کی نیلامی کا عمل شروع کرنے کے لیے تین ہفتے دیے جائیں، عدالت نے سی ڈی اے کو پلاٹوں کی بیلٹنگ کے حوالے سے کوئی فیصلہ جاری نہیں کیا اور سی ڈی اے نے غلط بیانی سے عدالت کے حکم کا استعمال کیا، عدالت کو معلوم ہوا کہ اشتہار میں غلطیاں ہیں اور پلاٹوں کی الاٹمنٹ کی نیلامی کا عمل بھی مکمل نہیں ہوا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں